Tickerاخبارلائم لائٹ

عورت مارچ کو کیا کہنا غلط ہے؟؟؟ میشا شفیع کا بیان سامنے آگیا۔۔۔

کراچی: گلوکارہ میشا شفیع نے کہا ہے کہ عورت مارچ کو محض ایک مغربی ایجنڈا قرار دیا جارہا ہے جو کہ غلط ہے، قصہ ختم کرنے کے لیے ایک ہی بار تمام عورتوں کو بند کردو۔

اپنے ٹویٹ میں میشا شفیع نے کہا کہ جب معاشرے میں ایک متاثرہ، حملے کی زد میں گھرے اور دیوار سے لگائے گئے طبقے نے عالمی دن کے موقع پر سڑکوں پر آنے کا فیصلہ کیا تو اس روز مکروہ اور مشتبہ لوگوں نے اس تقریب کو بھی تاریک اور مبہم بنا دیا۔

میشا شفیع نے یہ بھی کہا کہ اس بار یہ معاملہ ایک لڑکی کے پوسٹر سےشروع ہوا جس میں ایک مولوی کا بچی کو جنسی طور پر ہراساں کرنے کا ذکر تھا۔

گلوکارہ کا کہنا تھا کہ حقیقت تو یہ ہے کہ بچوں سے زیادتی کرنے والے آج بھی کھلے عام گھوم رہے ہیں اور بچے باہر جانے اور کھیلنے سے قاصر ہیں لیکن عورت مارچ کو محض ایک مغربی ایجنڈا قرار دیا گیا ہے۔

اپنی ٹویٹ میں انہوں نے یہ بھی کہا کہ قصہ ختم کرنے کے لیے ایک ہی دفعہ ساری عورتوں کو بند کردو اس طرح نہ ہم رہیں گے اور نہ تم۔

میشا شفیع نے مزید کہا کہ ’’جینیات‘‘ میں بھی مسٔلہ ہے اور جینز پہن کر پھرنے میں بھی مسٔلہ ہے۔

Tags

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button