fbpx
آج کا ایشواخبار

پورے ملک میں گندم کے بحران کی وجہ وفاقی حکومت ہے، سندھ حکومت

جولائی 21, 2020 | 10:57 شام

وزیر اطلاعات سندھ ناصر حسین شاہ اور وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر مرتضیٰ وہاب نے کراچی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ تاثر دیا جارہا ہے گندم بحران کی وجہ سندھ حکومت ہے، ملک بھر میں گندم کی مصنوعی قلت پیدا کی جارہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اطلاعات سید ناصر حسین شاہ نے کہا کہ پہلے بھی جب گندم بحران آیا تو الزامات سندھ حکومت پر لگائے گئے، اگر گندم بحران صرف سندھ میں ہوتا تو سندھ کو ذمےدار قرار دیتے، لیکن پورے ملک میں گندم بحران کی وجہ وفاقی حکومت ہے۔

انھوں نے کہا کہ سندھ میں گندم کی ہدف سے زیادہ پیداوار ہوئی، دیگر صوبوں میں ٹارگٹ سے کم گندم کی پیداوار ہوئی، ملک میں مصنوعی گندم بحران پیدا کرنے کی کوشش کی جارہی ہے، ہمیشہ گندم ستمبر میں ملز کو ریلیز کی جاتی ہے، ہمیں کہا جارہا ہے کہ ابھی سے گندم کو ریلیز کیا جائے، شاید ذخیرہ اندوزوں کو فائدہ پہنچانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

مشیر وزیراعلیٰ بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ اس وقت پاکستان میں گندم کی قلت نہیں ہونی چاہیے تھی،  ملک بھر میں گندم کی مصنوعی قلت پیدا کی جارہی ہے، منافع خوروں کو فائدہ پہنچانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

انھوں نے کہا کہ وفاق تمام صوبوں پر دباؤ ڈال رہا ہے کہ قبل از وقت گندم ریلیز کی جائے۔

مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ منافع خور یہ گندم افغانستان اسمگل کرینگے، قبل از وقت گندم ریلیز کرنے کے مستقبل میں نقصانات ہونگے۔

سید ناصر شاہ نے کہا کہ لازم نہیں ہے کہ ہم وفاقی حکومت کا یہ حکم مانیں، اگر وفاق کی پالیسی درست ہو تو ہم اس پر عمل کرینگے، وفاقی حکومت کے اکثر نمائندے رینٹ پر ہیں۔

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button