fbpx
اخبارسب کے لیے سب کچھ

کراچی میں بارش کے بعد بجلی غائب کی آنکھ مچولی

جولائی 26, 2020 | 11:06 صبح

کراچی میں موسلادھار بارش کے بعد شہر کے بیشتر علاقے تاریکی میں ڈوب گئے، ترجمان کے الیکٹرک نے اس صورتحال میں ہاتھ کھڑے کرتے ہوئے کہا ہے کہ پانی موجود ہونے کے باعث بجلی کا انفراسٹرکچر متاثر ہوا ہے، حکومتی اداروں سے اپیل ہے کہ نکاسی آب تیزی سے عمل میں لائیں۔

ذرائع کے مطابق شہر میں بارش شروع ہوتے ہی کے الیکٹرک کے 550 سے زائد فیڈر متاثر ہوگئے، مضافاتی علاقوں کی 80 فیصد بجلی معطل ہے ، ملیر، شاہ فیصل کالونی ، گلستان جوہر ، گلشن اقبال، ایف بی ایریا، لیاقت آباد، پی آئی بی کالونی ، گلشن معمار، کورنگی، اولڈ سٹی ایریا اور لیاقت آباد میں بجلی معطل ہے۔

ترجمان کے الیکٹرک کے مطابق بارش کے دوران چند علاقوں میں احتیاطی طور پر بجلی بند کی ہے، نشیبی اور وہ علاقے جہاں کنڈے لگے ہیں وہاں بجلی بند کی ہے۔

کے الیکڑک کے مطابق سڑک پر پانی موجود ہونے کے باعث بجلی کا انفراسٹرکچر متاثر ہوتا ہے،حکومتی اداروں سے اپیل ہے کہ نکاسی آب تیزی سے عمل میں لائیں۔

دوسری جانب ترجمان واٹر بورڈ کے مطابق شہرکو پانی فراہم کرنے والے دھابیجی گھارو ، پپری پمپنگ اسٹیشنز کی بجلی بند ہے، جس کے سبب شہر کو پانی کی فراہمی میں تعطل کا سامنا ہے۔

ترجمان واٹر بورڈ کا کہنا ہے کہ شہری پانی احتیاط سے استعمال کریں۔

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button