Tickerگلوبل ویلیج

حضرت محمدؐکی شان میں گستاخی کرنیوالا ملعون زندہ جل  کر خاکستر

ملعون دو سیکیورٹی گارڈز سمیت جہنم واصل

حضرت محمدؐکی شان میں گستاخی کرنیوالا ملعون زندہ جل  کر خاکستر

سٹاک ہوم  (ویب ڈیسک )حضوراکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی شان میں گستاخانہ خاکے بنانیوالا سویڈش کارٹونسٹ آگ میں جل کر خاکسترہو گیا ۔

سوئیڈن کا گستاخ کارٹونسٹ لارس ولکس کار حادثے میں زندہ جل کر اسوقت خاکستر ہوا جب اس کی کار سامنے سے آنے والے ٹرک سے ٹکرا گئی۔ حادثے میں گستاخ کارٹونسٹ کی سکیورٹی پر مامور دو پولیس اہلکار بھی ہلاک ہوگئے۔

لارس ولکس نے 2007ء میں گستاخانہ خاکے بنائےجس پر اُمت مسلمہ نےشدید احتجاج کیا تھا اوردنیا بھر کے مسلمان ممالک نے سوئیڈن کیساتھ سفارتی تعلقات بھی توڑ دیے تھے۔سویڈن حکومت نے اس کے بعد سے گستاخ رسولؐ کو سیکیورٹی فراہم کررکھی تھی۔

گستاخ ولکس کی عمر 75 سال تھی اور وہ2007ءمیں گستاخانہ خاکوں کے بعدسے پولیس کی سکیورٹی میں تھا۔ اِس ملعون کارٹونسٹ نے خاکوں کے ذریعے رسول اکرمﷺ کی شان میں گستاخی کی تھی۔

سوئیڈن کی پولیس نے تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ اتوار کی سہ پہر مارکریڈ کے باہر ایک کار اور ٹرک میں ٹکر ہوئی جس کے نتیجے میں دونوں گاڑیوں میں آگ بھڑک اٹھی  اور گستاخ اپنے محافظوں کیساتھ جل کر موقع پر ہی ہلاک ہوگیا جبکہ زخمی ٹرک ڈرائیور کا علاج کیا جارہا ہے۔

پولیس نے بتایا کہ حادثے کی وجوہات کےبارے میں علم نہیں ہوسکا ہےتاہم واقعے کی تحقیقات کی جارہی ہے۔

اس سے قبل 2010ء میں ولکس کےگھرکو آگ لگانے کی کوشش بھی کی گئی تھی جبکہ پینسیلوانیہ کی ایک خاتون پر ولکس کو ہلاک کرنے کی کوشش کا الزام عائد کیا گیا تھا۔

اِسی طرح 2015ءمیں ڈنمارک کےدارالحکومت کوپن ہیگن میں ایک تقریب کے دوران بھی ولکس قاتلانہ حملے میں بچ گیا تھا تاہم اس حملے میں ڈنمارک کا ایک فلم ساز مارا گیا تھا۔ القاعدہ نے ولکس کے قتل پر 10لاکھ ڈالر انعام بھی مقرر کررکھا تھا ۔

Tags

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button