Tickerسدا بہار

میرا چشمہ کھو گیا تھا لیکن پھر یہ آیت پڑھی اور مل گیا ۔۔ جُنید جمشید کے بیٹے نے کون سی آیت پڑھ کر کھوئی ہوئی چیز ڈھونڈنے کا طریقہ بتایا ، ان کے ساتھ کیا معجزہ ہوا،جانیں

نومبر 20, 2021 | 8:46 شام

 

اکثر اوقات ہماری چیزیں کھو جاتی ہیں۔ کبھی ہم رکھ کر بھول جاتے ہیں کہ ارے یہیں تو رکھی تھی لیکن کھو گئی۔ بہت

ڈھونڈنے پر بھی نہیں ملتی۔ ایسی صورتحال میں ہر کوئی خُدا کو یاد کرتا ہے اس سے دعا کرتا ہے۔روزمرہ زندگی میں انسان اتنے ڈھیروں کاموں میں الجھا ہوا ہوتا ہے کہ چیزیں کہاں رکھ دیں یہ یاد ہی نہیں رہتا۔ بالکل اسی طرح جُنید جمشید کا بیٹا بابر اپنی ایک ویڈیو میں بتا رہا ہے کہ: میں صبح سو کر اُٹھا تو ددیر ہوگئی تھی، ظہر کی نماز جماعت نکلنے والی

 

تھی، میں اچانک اُٹھا اپنا چشمہ سائیڈ میں رکھے ہوئے صوفے پر رکھ دیا اور بھول گیا، نہا کر آیا، تو جگہ جگہ چشمہ ڈھونڈا، میری بیوی اپنے مہکے گئی ہوئی تھی، کمرہ بند تھا، کچھ پتہ نہ چلا کہ چشمہ کہاں گیا؟ پھر میں نے گھر میں چیک کیا سب سے پوچھا لیکن چشمہ نہ ملا، تو میں نے ایک آیت حسبُنا اللهُ ونِعْمَ الوَكيلُ پڑھی۔ اس کے بعد مجھے خود

 

بخود خیال ایا کہ مجھے تو نماز پڑھنی تھی، میں نے گھر میں نماز پڑھی اور پھر جب اُٹھ کر کمرے میں چکر لگانے لگا تو نظر پڑی کہ چشمہ صوفے پر ہی ملا۔ اس ویڈیو میں بتاتے ہوئے وہ کہتے ہیں: آج تو معجزہ ہی ہوگیا کہ میں نے یہ آیت پڑھی، اس کے بعد اللہ کو یاد کیا نماز پڑھی اور میری کھوئی چیز مل گئی۔ یہ سب نماز کے فضائل ہیں۔ اللہ انہیں پسند

 

کرتا ہے جو اس کو یاد کرتے اور نماز کو قائم کرتے ہیں۔ ہمیں بھی اللہ کے دین پر چلنے کی کوشش کرنی چاہیئے تاکہ دنیا و اخرت میں مقام حاصل کر سکیں۔

 

Tags

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button