fbpx
آج کا ایشواخبار

تھرا کے آسماں کو دیکھا حسینؑ نے

اگست 30, 2020 | 1:18 صبح
تھرا کے آسماں کو دیکھا حسینؑ نے

کہنے لگے زیاد کی پھر وہ سپاہ سے

معصوم کی یہ پیاس کہے جو نگاہ سے

برداشت نہیں ہو رہی مجھ کجکلاہ سے

پھیری زباں لبوں پہ جو اس نورِ عین نے

تھرا کے آسماں کو دیکھا حسینؑ نے

لیکن ادھر تھے سنگ دلی کے لعینِ وقت

وحشت سے بھر چکی تھی مکمل جبینِ وقت

وہ ظالم کہ یزید کی بیعت تھی دینِ وقت

ترکش بنی ہوئی تھی ہر اک آستینِ وقت

نکلا پھر ایک تیر کمانِ قتال سے

ٹکرا گیا وہ آلِ محمدؐ کے لال سے

پانی جو مانگتا تھا گلہ خوں سے بھر گیا

باہر تمام سرخیِ اندروں سے بھر گیا

سورج بھی سرخ رنگ کے افسوں سے بھر گیا

صفحہ زمیں کا خون کے مضموں سے بھر گیا

ہائے لہو جو بہنے لگا تو امام نے

چلومیں بھر لیا گلِ خیرالانام میں

سوئے فلک اچھالا اسے اور یوں کہا

لے اے خدا حسینؑ نے وعدہ نبھا دیا

تو نے مطالبہ تھا براہیم سے کیا

ذبحِ عظیم میں ہوئی تاخیر بس ذرا

لے آج اُس کی نسل سے اس کاجواب لے

اجدا دکے چکا دیے سارے حساب ، لے

منصور آفاق

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button