fbpx
اخبارگلوبل ویلیج

آرٹیکل 370 کیخلاف قانونی لڑائی لڑیں گے، سابق وزرائے اعلیٰ مقبوضہ کشمیر

اگست 31, 2020 | 9:54 صبح

مقبوضہ کشمیر کے سابق وزرائے اعلیٰ فاروق عبداللہ اور عمر عبداللہ کا کہنا ہے کہ آرٹیکل 370 کے غیرقانونی اقدام کیخلاف قانونی لڑائی لڑیں گے، بی جے پی مقبوضہ وادی کی مسلم اکثریت کو ہندو اقلیت سے بدلنا چاہتی ہے، حدبندی کمیشن کو نہیں مانتے۔

بھارتی اخبار کو انٹرویو دیتے ہوئے مقبوضہ کشمیر کے سابق وزرائے اعلیٰ فاروق عبداللہ، عمرعبداللہ نےکہا کہ بھارتی سپریم کورٹ میں آرٹیکل 370 کے خاتمے کیخلاف پٹیشن مضبوط قانوی بنیادوں پر ہے۔

انہوں نے کہا کہ ڈومیسائل قانون کے اقدام کو مسترد کرتے ہیں، فاروق عبداللہ کا کہنا تھا کہ بھارتی حکومت کی جانب سےکی جانے والی حد بندی پر یقین نہیں رکھتے۔

ان کاکہنا تھا کہ بھارتیہ جنتاپارٹی کےمقبوضہ وادی میں مخصوص عزائم ہیں ، بی جے پی مقبوضہ وادی کی مسلم اکثریت کو ہندو اقلیت سے بدلنا چاہتی ہے۔

عمرعبداللہ کا کہنا تھا کہ بھارتی حدبندی کمیشن گزشتہ برس 5اگست کو کئے جانے والے بھارتی اقدام کی پیداوار ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ گارنٹی سےکہتے ہیں کہ 90 فیصد سے زائد نئے ڈومیسائل غیر مسلموں کوجاری ہوئے ہونگے۔

عمرعبداللہ کا کہنا تھا کہ بھارتی حکومت سے مذاکرات کا کوئی دروازہ نہیں کھلا ہے، نئی بھارتی حکومت اگر مذاکرات کیلئے آمادہ ہوئی تو دیکھیں گے۔

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button