fbpx
آج کا ایشواخبار

سارے نیوز چینل خاموش ،،، سوشل میڈیا پر شور

ستمبر 3, 2020 | 8:17 صبح

لاہور(لمحہ اِخبار)راولپندی میں ایک  راہ چلتی لڑکی کو کچھ بعدمعاش گھیر لیتے ہیں ۔اسے زبردستی بے لباس کر دیتے ہیں ۔ اس پر تشدد کرتے ہیں اور اس کی ویڈیو بناتے رہتے ہیں ۔ سرراہ ہونے والا یہ ہولناک واقعہ عام اس وقت ہوتا ہے جب ملزمان لڑکی کی ویڈیو سوشل میڈیا پر ڈال دیتے ہیں ۔ یوں یہ کہانی سوشل میڈیا سے شروع ہوتی ہے اورکئی مہینوں بعد پھر سوشل میڈیا پر ہی زیر بحث ہے۔  یہ ہولناک واقعہ نہ تو اس وقت ملک کے بڑے نیوز چینل پر کوئی خاص جگہ حاصل کر سکا اور نہ ہی اب کسی چینل نے اسے ایشو بنایا ۔ آواز اٹھ رہی ہے تو ایک بار پھر صرف سوشل میڈیا پر، جہاں اس کیس کے مرکزی ملزم کی ضمانت کی منظوری پر نظام انصاف پر سوال اٹھائے جا رہے ہیں ۔

ملک کے ایک بڑے شہر میں ایک لڑکی کے ساتھ سر راہ اس طرح کا واقعہ ہو جانا ۔ مہینوں اس واقعے کا  مقدمہ درج نہ ہو پانا ۔پھر ملزمان کا پکڑے نہ جانا ،اور پھر ملزمان کی عبوری ضمانتیں ہو جانا ،اور اب پکڑے گئے تین ملزمان میں سے مرکزی ملزم کا ایک لاکھ روپے کے مچلکوں کے عوض ضمانت پر بری ہو جانا ملک میں رائج نظام قانون و انصاف پر کئی سوال اٹھاتا ہے ۔اور اب لوگ سوشل میڈیا پر انصاف کے لیے اپنا کردار ادا نہ کرنے پر ملک کے نیوز چینلز کو بھی شدید تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں ۔

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button