fbpx
Tickerگلوبل ویلیج

اومیکرون کا خدشہ۔۔ تعلیمی ادارے بند

omicron school closed

جنوری 14, 2022 | 5:37 شام

 

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک)عالمی وبا کورونا کے بھارت میں تباہی مچانے کے بعداومیکرون نے اپنا اثر دکھانا شروع کر دیا

ہے، بھارتی ریاست مہاراشٹر میں 15 فروری تک تعلیمی سرگرمیاں بند کر دی ہیں۔ مہاراشٹر کی ریاستی حکومت نے ایک سرکولر جاری کیا ہے جس میں 8 جنوری کے ریاستی احکامات کا حوالہ دیا گیا ہے۔نئے احکامات کے تحت نیو دہلی سمیت مہاراشٹر کے تمام تعلیمی اداروں کو کورونا کے بڑھتے کیسز کے باعث 15 فروری تک بند کر دیا گیا ہے۔ حکومت نے بورڈ

 

کے امتحانات کے باعث دسویں اور بارہویں جماعت کے طلباء کو اپنی سرگرمیاں جاری رکھنے کا حکم دیا ہے۔دسویں اور بارہویں جماعت کے طلباء کو سخت کورونا احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا بھی حکم دیا گیا ہے۔ نئے سرکولر کے مطابق اساتذہ اپنی محکمہ جاتی سرگرمیاں ایجوکیشن ڈپارٹمنٹ میں انجام دیں گے. مہاراشٹرکے ترجمان کا کہنا ہے کہ امتحانات

 

اپنے وقت پر لئے جائیں گے اور تمام سطح کی کلاسوں کے امتحانات کووڈ کے ضابطہ اخلاق کے تحت لئے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ نئی پابندیاں اودھے ٹھاکرے گورنمنٹ نے آج ہی جاری کی ہیں۔ اودھے ٹھاکرے حکومت کے ترجمان کا کہنا تھا کہ عوام کی جانب سے احتیاطی تدابیر کی سخت خلاف ورزی کی جارہی ہے۔واضح رہے کہ مہاراشٹر میں سیلونز ،

 

اسپورٹس کمپلیکس ، سوئمننگ پولز، جمنازیم اور دیگر تفریح مقامات کو بند کر دیا گیا ہے۔پوری ریاست میں صرف ویکسی نیٹڈ افراد کو پبلک ٹرانسپورٹ استعمال کرنے کی اجازت ہو گئی، جبکہ سینما ہالز 50 فی صد گنجائش کے ساتھ کھولنے کی اجازت ہو گی.

Tags

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button