آج کا ایشواخبار

سندھ پولیس کے اعلیٰ افسران کا چھٹی کی درخواستیں واپس لینے کا مشروط فیصلہ

کراچی: آرمی چیف کے نوٹس اور بلاول بھٹو زرداری سے ملاقات کے بعد سندھ پولیس کے اعلیٰ افسران نے چھٹی کی درخواست واپس لینے کا مشروط فیصلہ کرلیا۔

سندھ پولیس کے اعلیٰ افسران نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے کراچی واقعے پر نوٹس لینے اور پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے ملاقات کے بعد یہ فیصلہ کیا۔

سندھ پولیس کی جانب سے جاری ٹوئٹ میں کہا گیا ہے کہ ’آئی جی سندھ نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ اپنی چھٹی کی درخواست کو فی الحال التواء میں رکھ رہے ہیں اور انہوں نے ماتحت افسران کو بھی ہدایت کی ہے کہ وہ بھی وسیع تر قومی مفاد  میں اپنی چھٹی کی درخواستیں 10 روز کے لیے مؤخر کردیں‘۔

سندھ پولیس کے مطابق آئی جی سندھ نے ماتحت افسران کو ہدایت کی ہے کہ افسران معاملے کی انکوائری کا نتیجہ آنے تک چھٹیوں کی درخواستوں کو مؤخر کردیں۔

سندھ پولیس کی جانب سے جاری ٹوئٹ میں کہا گیا ہے کہ بلاول بھٹو زرداری اور وزیراعلیٰ سندھ کے آئی جی ہاؤس آنے اور اظہار یکجہتی پر مشکور ہیں، ہم آرمی چیف کے مشکور ہیں کہ انہوں نے پولیس فورس کی دل شکنی کا احساس کیا۔

ترجمان سندھ پولیس کے بیان کے مطابق کراچی واقعے کی انکوائری کرانے کا حکم دینے پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے شکر گزار ہیں، آرمی چیف نے یہ یقین دہانی بھی کرائی ہے کہ تحقیقات غیر جانبدارانہ ہو گی تاکہ سندھ پولیس کے وقار کو بحال کیا جا سکے۔

ترجمان کے مطابق سندھ پولیس بلاول بھٹو زرداری اور وزیر اعلیٰ سندھ کی بھی مشکور ہے جنہوں نے آئی جی سندھ کے پاس آکر پولیس کی قیادت سے اظہار یکجہتی کیا۔

سندھ پولیس کے ترجمان نے بیان میں لکھا کہ 18اور19 اکتوبر کی رات کو پیش آنے والا واقعہ سندھ پولیس کے تمام اہلکاروں میں شدید کرب اور ناراضی کا باعث بنا جس کے بعد آئی جی سندھ نے چھٹی پر جانے کا فیصلہ کیا، اس کے نتیجے میں پولیس کے باقی افسران نے فیصلہ کیا کہ وہ بھی احتجاجاً چھٹی پر چلے جائیں گے، یہ فیصلہ تمام افسران نے انفرادی طور پر کیا کیونکہ محکمے کے ہر فرد کو شدید بے عزتی کا احساس ہوا۔

ترجمان کے مطابق سندھ پولیس معاملے کی حساسیت کا احساس کر کے واقعے کے انکوائری کرانے کاحکم دینے پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی شکر گزار ہے۔

خیال رہے کہ کیپٹن ریٹائرڈ صفدر پر مقدمے اور گرفتاری کیلئے پولیس حکام پر دباؤ کے معاملے پر آج انسپکٹر جنرل ( آئی جی) سندھ سمیت اعلیٰ پولیس افسران نے چھٹیوں پر جانے کا فیصلہ کیا تھا۔

آئی جی سندھ، 3 ایڈیشنل آئی جیز، 25 ڈی آئی جیز اور 30 ایس ایس پیز نے چھٹی کی درخواستیں دے دی تھیں، چھٹی کی درخواست میں لکھا تھا کہ کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کے خلاف ایف آئی آر کے واقعے میں پولیس افسران کو بے عزت اور ہراساں کیا گیا، افسران سے ہوئے ناروا رویے پر تمام پولیس افسران کو دھچکا لگا۔

بلاول سندھ پولیس سے اظہاریکجہتی کیلئے آئی جی ہاؤس پہنچ گئے

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے سندھ پولیس سے اظہاریکجہتی کیلئے انسپکٹر جنرل (آئی جی) پولیس مشتاق مہر کی رہائش گاہ پہنچے۔ بلاول بھٹو زرداری کے ہمراہ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ، صوبائی وزیر اطلاعات ناصر حسین شاہ اور سندھ پولیس کے اعلیٰ افسران بھی موجود تھے۔

بلاول بھٹو زرداری نے بطور سربراہ حکمران جماعت اعلیٰ پولیس افسران کے سامنے کراچی واقعے کی مذمت کی، سندھ پولیس کے دہشت گردی اور جرائم کے خلاف کردار کو سراہا۔

اس موقع پر افسران سے گفتگو میں بلاول نے کہا کہ سندھ پولیس نے دہشت گردی اور جرائم کے خلاف قابل ستائش خدمات سرانجام دی ہیں، سندھ پولیس نے ملک دشمن عناصر کے خلاف مثالی کارنامے انجام دیے۔

انہوں نے کہاکہ چینی قونصل خانےکا تحفظ گواہ ہے کہ سندھ پولیس نے خارجہ امور کے تحفظ میں بھی اہم کردار ادا کیا، پاکستان سٹاک مارکیٹ کا دفاع گواہ ہے پولیس نے پاکستان کے معاشی حب کو اپنی زندگیاں دے کر حفاظت کی۔

ان کاکہنا تھا کہ آرمی چیف نے مجھے کراچی واقعے کی شفاف تحقیقات کی یقین دہائی کرائی ہے، انہوں نے مجھے یقین دہانی کرائی ہے کہ کراچی واقعے کی تحقیقات کے جلد نتائج سامنے آئیں گے۔

بلاول بھٹو کا پولیس افسران سے گفتگو میں کہنا تھا کہ سندھ حکومت بھی کراچی واقعے کی وزراء کی سطح پر تحقیقات کررہی ہے، سندھ میں قیام امن اور دہشت گردی کے خلاف جدوجہد پر سندھ پولیس کی خدمات کا معترف ہوں اور یقین دلاتا ہوں سندھ کے عوام کا صوبے کی پولیس پر فخر کا تسلسل جاری رہے گا۔

علاوہ ازیں بلاول نے اپنی ٹوئٹ میں کہا تھا کہ میں سندھ پولیس کے ساتھ کھڑا ہوں اور اظہار یکجہتی کرتا ہوں۔

انہوں نے ہیش ٹیگ استعمال کیا اور عوام سے بھی اس حوالے سے رائے پوچھی۔ #WeStandWithSindhPolice

خیال رہے کہ سندھ پولیس میں چھٹی پر جانے کا نہ تھمنے والا سلسلہ شروع ہوگیا ہے اور آئی جی، ایڈیشنل آئی جیز اور ڈی آئی جیز کے بعد سندھ کے ضلعی پولیس افسران نے بھی چھٹی پر جانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ مختلف علاقوں کے سینیئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ایس ایس پیز) نے چھٹی کی درخواستیں دے دی ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button